کامیابی کا پہلا قدم خود شناسی

ڈاکٹر عالیہ خان

قدرت نے انسان کو بے شمارپوشیدہ صلا حیتیں اور قوتیں عطا کی ہیں زندگی میں کامیابی اور خوشی کے حصول کے لیے ان پوشیدہ قوتوں اور صلاحیتوں کا سراغ لگانا ضروری ہے۔ اور جب انسان اپنے آپ سے آگاہی حاصل کرلیتا ہے تو اسے اپنی ذات پر اعتماد پیدا ہو جاتا ہے ۔جب اپنے اوپر اعتماد کی صلاحیت پیدا ہو جائے تو زندگی میں مایوسی اور بددلی کا سامنا نہیں کرنا پڑتا ہے اور خود شناس انسان  ہی دنیا میں کامیابی کی طرف قدم بڑھاتے ہیں۔

مثبت خیالات ہماری کامیابی کے ضامن ہیں اس کے لیے ذہن کو صحیح خطوط پر کام کرنے کے لیے تربیت دینا ضروری ہے ہمارے خیالات ذہن کی آبیاری کرتے ہیں کیوں کہ ہمارے خیالات ہی ہمیں بناتے اور بگاڑتے ہیں مثبت خیالات انسان کے اندر کام کی تحریک پیدا کرتے ہیں اور انسان جدوجہد کر کے کامیاب ہو جاتا ہے۔

قدرت نے انسان کے اندر کچھ پیدائشی صلاحیتیں بھی رکھی ہیں اب یہ انسان کا کام ہے کہ ان صلاحیتوں سے فائدہ اٹھائے۔ بعض اوقات جب لوگ کچھ کرنا چاہتے ہیں تو دوسرے لوگوں کے رویے ان کی ہمت پست کر دیتے ہیں لوگوں کے رویہ کی پرواہ نہ کریں آپ خود اپنی قسمت کے مالک ہیں ۔کامیاب اور ناکام افراد کے درمیان فرق عملی جدو جہد کا ہے کامیاب وہی لوگ ہوتے ہیں جو عمل کے قائل ہوتے ہیں جب بھی کوئی نیا خیال ذہن میں آتا ہے فورا اس پر عمل کرکے جدوجہد شروع کردیتے ہیں وہ مسائل سے نہیں گھبراتے اپنی قدر پہچانتے ہیں ذمہ داری سے کام انجام دیتے ہیں ان میں تجسس اور نئے کام کرنے کا جذبہ ہوتا ہے  ان میں  کامیابی کے حصول کی شدید لگن ہوتی ہے۔

کامیابی کا راز صرف محنت میں نہیں ہے بلکہ عقلمندی سے کام کرنے میں پوشیدہ ہے اور یہ راز کامیاب لوگوں کو دوسروں سے ممتاز کرتا ہے کامیاب لوگوں کو معلوم ہوتا ہے کہ کونسا کام کتنا ضروری ہے کامیاب لوگ صرف خواب ہی نہیں دیکھتے بلکہ ان کو حقیقت میں بدلنے کے لیے اپنی پیشرفت پر بھی نظر رکھتے ہیں ۔ کامیابی کا اصل مطلب اپنی صلاحیتوں کا مثبت استعمال ہے اصل کامیابی  کی خوشی حصول مقصد میں نہیں بلکہ جدوجہد میں ہے اپنی ذات کے عروج پر پہنچنا  اصل کامیابی ہے ہمیں وہ بننا چاہیئے جس کی صلاحیت ہم میں ہیں یہ جاننا بھی ضروری ہے کہ ہر انسان ہر کام نہیں کر سکتا۔  اگر آپ اپنی کوششوں اور جدوجہد سے محبت کرتے ہیں تو  آپ کی کامیابی یقینی ہے۔

آپ جتنا کامیابی کے قریب ہونگے اتنا ہی لوگ آپ کو تنقید کا نشانہ بھی بنائیں گے آپ کو خود اپنے لیے لڑنا ہے کیوں کہ جس شخص کے ساتھ آپ سب سے زیادہ وقت گزارتے ہیں وہ آپ خود ہیں زندگی میں کتنی ہی مرتبہ آپ نے کسی کامیاب انسان کو دیکھ کر رشک کیا ہوگا دوسروں کی خوبیوں کا جائزہ لینا کوئی بری بات نہیں اہم یہ ہے کہ ان کو دیکھ کر آ پ اپنے لیے کیا محسوس کرتے ہیں ۔ آپ کو اپنی شخصیت کے بارے میں جاننا ہوگا لوگ آپ کے بارے میں کیسا محسوس کرتے ہیں کہیں ایسا تو نہیں کہ آپ کے سامنے خوش اخلاقی کا مظاہرہ کرتے ہوں اور پیٹھ پیچھے مذاق اڑاتے ہوں لوگ آپ سے ملنا پسند کرتے ہیں یا آپ سے ملنے سے کتراتے ہیں۔ کامیابی کے حصول کے لیے ضروری ہے کہ آپ ایسے لوگوں میں وقت گزاریں جو خود کامیاب ہوں ان کو دیکھ کر آپ میں بھی کامیابی کی جستجو پیدا ہوگی اور آپ کامیابی کے لیے کوشش کریں گے انسان غلطیوں سے ہی سیکھتا ہے کوشش کریں کہ غلطی بار بار نہ ہو یہ ذہن میں رکھیں کہ کب آپ کو آگے بڑھنا ہے یاد رکھیں ناکامی کامیابی کا ہی حصہ ہے کبھی لوگوں کوکو تبدیل کرنے کی کوشش نہ کریں تبدیل کرنا ہو تو اپنے آپ کو کریں آپ دنیا کو جس نظر سے دیکھیں گے دنیا آپ کو ویسی ہی نظر آئے گی زندگی میں جب کبھی اچھے مواقع آ ئیں انھیں ضائع  نہ کریں ان سے فائدہ حاصل کریں کامیابی خود بخود آپ کے قریب آتی جائے گی کامیابی حاصل کرنے کے لیے یہ بھی ضروری ہے کہ اپنی صحت کا بھی خیال کیا جائے بہت سا کام اکیلے ہی انجام دینے سے گریز کریں اس معاملے میں دوسروں کی مدد بھی لیتے رہیں اپنے آپ کو تازہ دم اور چاق و چوبند رکھنے کی کوشش کریں کام کے ساتھ ساتھ اپنے من پسند مشا غل  بھی جاری رکھیں ۔

اگر انسان کو ناکامی کا سامنا کرنا پڑے تو دل برداشتہ ہونے کی بجائے ناکامی کی وجہ تلاش کرکے اپنی اصلاح کرے اور یہ قدرت کا اصول بھی ہے کہ ناکامی کے بغیر کامیابی کا حصول ممکن ہی نہیں جس شخص کو ناکامی کی کڑواہٹ کا اندازہ  نہ ہو وہ کامیابی کی مٹھاس کو  بھی نہیں جان سکتا  زندگی میں کامیاب وہی ہوتے ہیں جو کبھی ناکام ہوئے ہوں کیوں کہ گر کے اٹھنا ہی بہادری ہے اور جو اس بہادری کو نہیں جانتے وہ کبھی کامیاب ہو ہی نہیں سکتے ہیں۔

Related posts

Leave a Comment